94

بلتستان یونیورسٹی کا یواین ڈی پی کے اشتراک سے شجرکاری مہم کا آغاز

سکردو( ویب ڈیسک) بلتستان یونیورسٹی اور یو این ڈی پی کے تحت مشترکہ شجرکاری مہم کاآغاز انچن کیمپس بلتستان یونیورسٹی سے ہوا۔ اِس سلسلے میں باقاعدہ تقریب منعقد ہوئی جس میں سینئر وزیر حاجی اکبر تابان ، منسٹرپلاننگ اینڈ ڈیویلپمنٹ اقبال حسن،ایڈیشنل چیف سیکرٹری سیدابرار، یواین ڈی پی کے نمائندے عبدالوقاص، اسسٹنٹ کنٹری ڈائریکٹر یو این ڈی پی امان اللہ، رجسٹرار بلتستان یونیورسٹی وسیم اللہ جان ملک، ٹریژرر شاکر شمیم، ڈائریکٹر اکیڈمکس ڈاکٹر ذاکر حسین ذاکر اورڈائریکٹر پروفیشنل ڈیویلپمنٹ ڈاکٹر حاجی کریم خان اور دیگر مہمانان موجود تھے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سینئر وزیرحاجی اکبر تابان نے کہا کہ سرسبز بلتستان ہم سب کا خواب ہے اور اس خواب کی تعبیر ہم سب مل کر حاصل کریں گے۔ یہ خطہ قدرت کے حسین اور انمول تحفوں سے مالا مال ہے۔ یہاں کے ماحول اور شجر کاری کے سلسلے میں ہم سب کو باشعور ہونا ہوگا ۔انہوں نے مزید کہا کہ سرسبز پاکستان کے خواب کی تکمیل میں ملکی جامعات کلیدی کردار ادا کرسکتی ہیں۔ منسٹر پلاننگ اینڈ ڈیویلپمنٹ اقبال حسن نے کہا کہ بلتستان یونیورسٹی ہم سب کا اثاثہ ہے۔ اس کی ترقی کیلئے ہم سب یقینی کردار ادا کریں گے۔

انہوں نے کھرمنگ سمیت دیگر اضلاع میں گلشیئرز گرافٹنگ پروجیکٹ کیلئے 5کروڑ خطیر رقم کا اعلان کیا۔ایڈیشنل چیف سیکرٹری سید ارابر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عنقریب بلتستان یونیورسٹی میں ایک سینٹر قائم کیا جائے گا جس میں ماحولیاتی تبدیلی پر تحقیق ہوگی جبکہ گلیشرزپربھی تحقیق اِسی سینٹر کے تحت انجام ہوگی۔ یواین ڈی پی کے چیف عبدالوقاص نے کہا کہ یواین ڈی پی گلاف ٹو پروجیکٹ کے تحت بلتستان یونیورسٹی کے ساتھ اہم شعبوں میں بھرپور تعاون کریں گے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بلتستان یونیورسٹی کے رجسٹرار وسیم اللہ جان ملک اور ٹریژرر شمیم شاکر نے کہا کہ بلتستان یونیورسٹی کی تعمیرات کیلئے 15سو اراضی مختص ہوچکی ہے۔ مختص شدہ زمین اگرچہ بنجر ہے لیکن یہاں شجرکاری کے بے پناہ مواقع موجود ہیں۔ اُمید کرتے ہیں کہ یواین ڈی پی اور دیگر ادارے جنگلات، زراعت اور شجرکاری جیسے قدرتی عوامل کی بڑھوتری کیلئے بھرپور معاونت کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں