86

نئی دہلی: بھارتی حکام گیتاکے والدین ڈھونڈنے میں ناکام ،50 رشتے ڈھونڈ لیے

نئی دہلی (ویب ڈیسک) پاکستان سے بھارت جانے والی قوت سماعت و گویائی سے محروم لڑکی گیتا کےوالدین توتاحال نہ مل سکے مگر حکومتی اشتہار کے بعد گیتا کے 50 رشتے آگئے۔

تفصیلات کے مطابق گیتا نامی بھارتی لڑکی نے غلطی سے سرحد پار کرلی تھی جس کے بعد پاکستانی حکام نے قوت گویائی و سماعت سے محروم لڑکی کو ایدھی فاؤنڈیشن کے حوالے کیا تھا۔

گیتا نے اپنی زندگی کے 13 سال ایدھی ہوم میں گزارے اور وہاں اُس کی پرورش عبدالستار ایدھی و دیگر حکام نے کی ، مذکورہ لڑکی کو 2015 میں بھارت واپس بھیج دیا گیا تھا تاہم تین سال گزر جانے کے باوجود بھی بھارتی حکام اس کے والدین کو تلاش کرنے میں ناکام رہے۔

بھارتی اخبار کے مطابق حکومت نے گیتا کی خواہش کو مدنظر رکھتے ہوئے اُس کی شادی کا اشتہار دیا گیا تھا جس میں کہا گیا تھا کہ جو شخص بھی اس لڑکی سے شادی کرے گا اُسے سرکاری نوکری، گھر اور گاڑی حکومت کی طرف سے دی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں